تدفین رات ساڑھے بارہ بجے ممبئی کے سانتا کروز جوہو قبرستان میں ہوگی۔

یہ جو گلشن نظر آرہا ہے اس کی چمک دمک کے پچھے کسی نہ کسی مالی کا ہاتھ ہے جس نے زیب وزینت بخشا ہے۔ اس مدرسہ کی ترقی دراصل والد ماجد مفتی عبداللہ صاحب پھولپوری نوراللہ مرقدہ کی محنت وجفاکشی کانتیجہ ہے

یہ راستہ تقریباً ایک درجن گاؤں راجہ پورسکرور، حسن پور ، منجیر پٹی ، بیناپارہ ، ابڈیہہ ، طویٰ ، سیدھا سلطان پور، سیہی پور، مرزا پور، نیاؤج، کجراکول جیسے کچھ دیگر گاؤں کو سرائے میر سے جوڑتا ہے۔ یہی نہیں بلکہ مدرسۃ الاصلاح، سر سیداسکول منجیرپٹی، نیاز پبلک اسکول عہداری پور(راجہ پور سکرور) عائشہ صدیقہ نسواں کالج اور بی آئی سی انٹر کالج بیناپارہ سے جوڑنے کا یہی ایک راستہ ہے جو جس سے ہزاروں طلبہ و طالبات روزانہ آتے اور جاتے ہیں۔

مولانا ایوب اصلاحی صاحب کی تدفین آج بروز اتوار بعد نماز ظہر مولانا کے آبائی گاؤں کونرہ گہنی میں واقع ہوئی ۔ نماز جنازہ مولانا کےبڑے بیٹے مولانا اجمل ایوب اصلاحی نے پڑھائی۔

تدفین اعظم آبائی وطن اعظم گڑھ کے کونرہ گہنی میں ہوگی۔ دہلی سے آعظم گڑھ کے لئے پانچ بجے تک روانہ ہوں گے۔

۔ اول عربی کے داخلہ کے لئے پہلا داخلہ ٹسٹ 15/شوال بمطابق 30/جون، بروز سنیچر کی صبح 8بجے مدرسہ کی تعلیمی عمارت میں منعقد ہوگا ۔

کامیاب ہونے والے طلبہ و طالبات کو انعام سے نوازا گیا جب کہ دیگر شرکاء کو بھی انعامات دیئے گئے ۔ پروگرام کے مہمان خصوصی مسیح الدین سنجری صاحب تھے ۔

یہ ایک مقابلہ جاتی پروگرام تھا ۔ پروگرام کے نجائج جلد ہی ایک دینی اجتماع کی تقریب میں طلبہ کو سنائے جائیں گے اور کامیاب ہونے والے طلبہ کو سند کے علاوہ پہلا مقام حاصل کرنے والے کو 2500 روپیہ نقد ، دوسرا مقام حاصل کرنے والے کو 2000 روپیہ نقد اور تیسرا مقام حاصل کرنے والے کو 1500 روپیہ نقد

ایم آئی ایم کے ریاستی انتظامی کمیٹی کے ممبر حامد سنجری نے کہا کہ سرائےمیر کا یہ حادثہ مقامی پولیس کی منصوبہ بند سازش کا نتیجہ ہے ۔

۔ جمعہ کی صبح جب باراتی اپنے گھر نوناری پہونچے ، پہونچتے ہی دونوں گروپوں میں مارپیٹ شروع ہوگئی ۔ اسی دوران ایک گروپ نے دوسرے گروپ کی کار کو آگ کے حوالے کردیا ۔ دیکھتے ہی دیکھتے کار جل کر راکھ ہوگئی ۔

HOME || ABOUT US || EDUCATION || CRIME || HUMAN RIGHTS || SOCIETY || DEVELOPMENT || GULF || RELIGION || SPORTS || LITERATURE || OTHER || HAUSLA TV
© HAUSLA.NET - 2018.