؞   طاہر مدنی سمیت دیگر بے قصوروں کو رہا کیا جائے: علماء کونسل
۱۲ فروری/۲۰۲۰ کو پوسٹ کیا گیا
اعظم گڑھ (پریس ریلیز/حوصلہ نیوز): راشٹریہ علماء کونسل کے ایک وفد نے بدھ کے روز ضلع مجسٹریٹ سے ملاقات کی۔ بلریاگنج میں ہوئے پولیس بربریت کے بعد علماء کونسل کے جنرل سکریٹری مولانا طاہر مدنی اور دیگر 18 لوگوں کو بے بنیاد مقدمات میں قید کئے جانے کے سلسلے میں 4 عدد مطالبات پر مشتمل ایک عرضداشت بھی دیا۔
وفد کی قیادت کر رہے علماء کونسل کے صوبائ صدر ٹھاکر انل سنگھ نے کہا کہ شہریت ترمیمی قانون کے خلاف قصبہ کی خواتین پرامن طریقہ سے احتجاج کر رہی تھیں۔ ضلع کے افسران طاہر مدنی صاحب کو خواتین کو سمجھانے کے لئے ساتھ لے کر گئے جس کے ثبوت ویڈیو، فوٹو و نیوز میں موجود ہیں۔ مگر جب خواتین احتجاج کرنے سے پیچھے نہیں ہوئیں تو مولانا کو ہی گرفتار کر لیا اور رات کے اندھیرے میں عورتوں پر لاٹھی چارج کیا و آنسو گیس کے گولے چھوڑے۔ جب خواتین کی چیخ و پکار سن کر مرد بھاگ کر آئے تو ان کو بھی گرفتار کر لیا جس میں بچے، بزرگ و طلبہ شامل ہیں۔ ہم پولسیہ کاروائ کو آئین مخالف گردانتے ہیں اور آج ہم عرضداشت کے ذریعہ مطالبہ کرتے ہیں کہ مولانا طاہر مدنی و دیگر پر لگائے گئے مقدمہ کو فورا جانچ کر واپس لیا جائے، ملک سے غداری جیسی دفعات کو ہٹایا جائے، طلبہ لیڈران پر اعلان انعام کو واپس لیا جائے اور جانچ پوری ہونے تک مقدمہ میں کوئ اور گرفتاری نہ ہو اس کو یقینی بنایا جائے۔ کونسل لیڈران کے مطالبہ پر ضلع مجسٹریٹ نے یقین دہانی کرائ کہ جو انصاف کے لئے مطالبہ کیا گیا ہے ان کو پورا کیا جائے گا۔ اس موقع پر پارٹی لیڈروں نے انتباہ دیا کہ ہمارے مطالبات جلد پورے نہیں ہوئے تو ہم سڑک پر سنگھرش کے ساتھ ہی جیل بھرو آندولن مہم چلائیں گے اور ایک ساتھ ہزاروں کارکنان اپنی گرفتاری دیں گے۔
اس موقع پر کونسل کے قومی ترجمان طلحہ رشادی، مہاراشٹرا پربھاری عبداللہ شیخ، ضلع صدر شکیل احمد، ماسٹر طارق، مطیع الدین، عارف، ابصار احمد، علی شیر، اشرف اصلاحی، شہباز رشادی، پرویز احمد، یوسف شیخ، عامر، مطیع اللہ، عدنان، اشرف اعظمی کے علاقہ دیگر پارٹی کے کارکنان موجود تھے۔

3 لائك

1 پسندیدہ

0 مزہ آگیا

0 كيا خوب

0 افسوس

0 غصہ


 
؞ ہم سے رابطہ کریں

تبصرہ / Comment
آپ کا نام
آپ کا تبصرہ
کود نقل کريں
؞   قارئین کے تبصرے
تازہ ترین
سیاست
تعلیم
گاؤں سماج
HOME || ABOUT US || EDUCATION || CRIME || HUMAN RIGHTS || SOCIETY || DEVELOPMENT || GULF || RELIGION || SPORTS || LITERATURE || OTHER || HAUSLA TV
© HAUSLA.NET - 2020.