؞   رسید پھاڑنے پر ہوا ڈاکخانہ میں ہنگامہ
۲۵ نومبر/۲۰۱۸ کو پوسٹ کیا گیا
مبارکپور (حوصلہ نیوز) : مبارکپور پوسٹ آفس میں سنیچر کے روز اسپیڈ پوسٹ کی پکی رسید نہ دینے پر پوسٹ آفس کے عملے اور لوگوں کے درمیان کہا سنی ہوگئی ، بات جب آگے بڑھی تو بھیڑ نے ہنگامہ مچادیا۔
اطلاع کے مطابق مبارکپور کے حسین آبا د کے رہنے والے دلشاد احمد نے ضلع مجسٹریٹ کو کچھ ہورہی دشواریوں کے خلاف خط لکھا تھا، جس کو بھیجنے کے لئے وہ پوسٹ آفس گئے تھے۔ پوسٹ کرنے کے بعد جب اس نے پیسہ دیا تو ڈاکخانہ کے عملہ نے اسے کمپیوٹرائز رسید کے بجائے ہاتھ سے لکھی ہوئی رسید دے دی ، اس پر دلشاد نے جب سوال کیا تو اس معاملہ کو لے کر دلشاد اور ڈاک کے عملہ کے درمیان کہا سنی شروع ہوگئی اس پر دلشاد نے فون کرکے اپنے کچھ لوگوں کو بھی بلالیا ۔ آئے ہوئے لوگوں نے ڈاکخانہ پر جم کر ہنگامہ کیا۔
اطلاع کے مطابق ڈاکخانہ کے عملے کے مطابق ہاتھ سے لکھی رسید نا لینے اور پکی رسید مانگنے کی ضد پر یہ ہنگامہ ہوا تھا جب کہ جاگرن نیوز کے مطابق ڈاکخانہ کے عملہ نے ایک گھنٹہ بعد پکی رسید دینے کے بات کہی تھی۔

0 لائك

0 پسندیدہ

0 مزہ آگیا

0 كيا خوب

2 افسوس

0 غصہ


 
؞ ہم سے رابطہ کریں

تبصرہ / Comment
آپ کا نام
آپ کا تبصرہ
کود نقل کريں
؞   قارئین کے تبصرے
تازہ ترین
سیاست
تعلیم
گاؤں سماج
HOME || ABOUT US || EDUCATION || CRIME || HUMAN RIGHTS || SOCIETY || DEVELOPMENT || GULF || RELIGION || SPORTS || LITERATURE || OTHER || HAUSLA TV
© HAUSLA.NET - 2018.