؞   بٹلہ ہاؤس انکاؤنٹرکی دسویں برسی پر ملک کے مختلف مقامات پر مظاہرے
۱۹ ستمبر/۲۰۱۸ کو پوسٹ کیا گیا
نئی دہلی/لکھنؤ/اعظم گڑھ(حوصلہ نیوز): بٹلہ ہاؤس انکاؤنٹر کی دسویں برسی کے موقع پر دارالحکومت دہلی سمیت ملک کے مختلف مقامات پر حکومت کے خلاف مظاہرے اور پروگرام ہوئے ہیں اور عوام نے انکاؤنٹر کی غیر جانب دارانہ جانچ کے اپنے مطالبے کو دہرا یا ہے۔
واضح رہے کہ 19 ستمبر 2008 کو دہلی کے بٹلہ ہاؤس میں اعظم گڑھ سے تعلق رکھنے والے دو طلبہ عاطف امین اور محمد ساجد کو دہلی پولیس نے ایک مبینہ انکاؤنٹر میں شہید کردیا تھا۔ ایک پولیس اہلکار موہن چندشرما کی بھی اس میں موت واقع ہوگئی تھی۔ پولیس کا دعوی ٰ ہے کہ یہ دونوں نوجوا ن دہلی میں 13ستمبر 2008 کے بم دھماکوں سمیت ملک میں اس طرح کی کئی واردات میں ملوث رہے ہیں۔ حقوق انسانی کے کارکنان اور عوام پہلے دن سے ہی اس انکاؤنٹر پر متعدد سوال اٹھاتے رہے ہیں۔
نئی دہلی میں وزیر اعلیٰ اروند کیجروال کی رہائش گاہ پر راشٹریہ علماء کونسل نے ایک احتجاجی مظاہر ہے کا انعقاد کیا جس میں کونسل کے سینکڑوں کارکنا ن نے حصہ لیا۔ ان کارکنان میں سے بیشتر اعظم گڑھ اور اطراف سے اس مظاہرے کے لیے آئے تھے۔ مظاہرین کیجریوال کے خلاف نعرے لگارہے تھے۔کونسل کے صدر مولانا عامر رشادی نے اپنے خطاب میں کہا کہ کیجریوال نے وزیر اعلیٰ بننے سے پہلے اس بات کا وعدہ کیا تھا کہ وہ 1984 کے سکھ مخالف فسادات اور بٹلہ ہاؤس انکاؤنٹر کی جانچ خصوصی تفتیشی ایجنسی یا ایس آئی ٹی سے کروائیں گے لیکن اقتدار میں آنے کے تین سال بعد بھی انہوں نے اپنے وعدے کو پور انہیں کیا۔ مولانا نے مطالبہ کیا کہ اس معاملے کی جانچ کے لیے فورا ایس آئی ٹی کی تشکیل کی جانی چاہیے۔
لکھنؤ میں رہائی منچ کے بینر تلے منعقد پروگرام میں سینئر صحافی اور میل ٹوڈے کے سابق ایڈیٹر بھرت بھوشن نے انکاؤنٹر کے فرضی ہونے پر تفصیل سے روشنی ڈالی۔ انہوں نے کہا کہ اس طرح کے واقعات پر سوال اٹھائے جانے کو لوگ غلط سمجھتے ہیں حالاں کہ ایسے موقع پر چپ رہنا ہی غلط ہے۔
جامعہ نگر کے علاقہ جوگابائی میں جماعت اسلامی ہند کی طلبہ تنظیم اسٹوڈینٹس اسلامک آرگنائزیشن نے اس موقع سے ایک عوامی پروگرام کا انعقاد کیا وہی بائیں بازو کی طلبہ تنظیم آئیسا نے بٹلہ ہاؤس میں واقع خلیل اللہ مسجد سے جامعہ ملیہ اسلامیہ تک انکاؤنٹر کے خلاف مارچ کا انعقاد کیا۔

11 لائك

0 پسندیدہ

3 مزہ آگیا

1 كيا خوب

1 افسوس

0 غصہ


 
؞ ہم سے رابطہ کریں

تبصرہ / Comment
آپ کا نام
آپ کا تبصرہ
کود نقل کريں
؞   قارئین کے تبصرے
تازہ ترین
سیاست
تعلیم
گاؤں سماج
HOME || ABOUT US || EDUCATION || CRIME || HUMAN RIGHTS || SOCIETY || DEVELOPMENT || GULF || RELIGION || SPORTS || LITERATURE || OTHER || HAUSLA TV
© HAUSLA.NET - 2018.