؞   کچہری بم دھماکہ معاملے میں حکیم طارق قاسمی کو عمر قید
۲۷ اگست/۲۰۱۸ کو پوسٹ کیا گیا
لکھنؤ(حوصلہ نیوز): لکھنؤ کی ایک خصوصی عدالت نے سال 2007 میں ہوئے بم دھماکوں کے الزام میں حکیم طارق قاسمی کو عمر قید کی سزا سنائی ہے۔ عدالت نے جمعرات کو حکیم طارق قاسمی اور ایک دوسرے ملزم اختر وانی کو مجرم قرار دیا تھا۔
حکیم طارق قاسمی رانی سرائے کے پاس سمو پور گاؤں کے رہنے والے ہیں اور دسمبر 2007 سے قید وبند کی مشکلات برداشت کررہے ہیں۔
عدالت نے دونوں افراد پر سواچھ لاکھ کا جرمانہ بھی عائد کیا ہے۔
خصوصی جج ببیتا رانی حکیم طارق قاسمی اور اختر وانی کو تعزیرات ہند کی دفعہ 115، 120بی، 121، 122،124اےاور 307 کے علاوہ دھماکہ خیز اشیاء کے قانون کے سیکشن 3، 4 اور 5اور انسداد غیر قانونی سرگرمیا ں قانون (UAPA)کے سیکشن 16، 18 اور 20 میں سزا سنائی ہے۔
واضح رہے کہ 23 نومبر 2007 کو لکھنؤ کی عدالت میں دو بم دھماکے ہوئے جس میں کچھ لوگ زخمی ہوئے تھے۔
یاد رہے کہ طارق قاسمی کو بارہ بنکی ریلوے اسٹیشن سے 22 دسمبر 2007 کو غیر قانونی اسلحہ کے ساتھ گرفتار کیا گیا تھا۔ جب کہ ان کے اہل خانہ اور حقوق انسانی کے کارکنان کا الزام ہے کہ ان کو 12 دسمبر کو رانی سرائے کے پاس سے اغواء کیا گیا تھا اور دس دن غیر قانونی حراست میں تشدد کا نشانہ بنایا گیا تھا۔ طارق پر لکھنؤ اور فیض آباد کی کچہریوں میں دھماکہ کا الزام ہے اور وہ ابھی لکھنؤ جیل میں قید ہیں۔اس ضمن میں قائم کئے جسٹس نمیش کمیشن نے پہلے ہی حکیم طارق قاسمی کی گرفتاری پرمتعدد سوالات کھڑے کرتے ہوئے مشکوک بتایا تھا۔
اس کیس کے ایک ملزم خالد مجاہد کی سال 2013 میں عدالتی تحویل میں پراسرار طور پر موت ہوگئی تھی اور اس کا مقدمہ ابھی زیر التوا ہے۔

0 لائك

0 پسندیدہ

0 مزہ آگیا

0 كيا خوب

3 افسوس

9 غصہ


 
؞ ہم سے رابطہ کریں

تبصرہ / Comment
آپ کا نام
آپ کا تبصرہ
کود نقل کريں
؞   قارئین کے تبصرے
Commented on : 2018-08-27 11:51:10
Mohammad Asmar : Main apne email pr se ye news paper remove krna chahta hun... Kyse kren baraye meharbani batayen jald se jald... Mera email hai..... qariasmar@yahoo.com

تازہ ترین
سیاست
تعلیم
گاؤں سماج
HOME || ABOUT US || EDUCATION || CRIME || HUMAN RIGHTS || SOCIETY || DEVELOPMENT || GULF || RELIGION || SPORTS || LITERATURE || OTHER || HAUSLA TV
© HAUSLA.NET - 2018.